یہ صرف ایک مذاق تھا،محبوبہ کیلئے اپنے دانتوں سے بنائے گئے ہار کی حقیقت سامنے آ گئی

قاہرہ (نیوز ڈیسک) محبوبہ کے لیے اپنے دانتوں سے بنائے گئے ہار کی حقیقت سامنے آ گئی۔تفصیلات کے مطابق کچھ روز قبل غیر ملکی میڈیا پر ایک خبر زیر گردش تھی جس میں بتایا گیا کہ ایک نوجوان نے محبوب کی محبت میں دانتوں کو اکھاڑ کر ہار بنوا لیا اور اسے اپنی گرل فرینڈ کو بطور تحفہ پیش کیا۔بتایا گیا کہ واقعہ مصر کے شہر قاہرہ میں پیش آیا تھا جہاں ایک لڑکے نے اپنی وفاداری ثابت کرنے کیلئے محبوبہ کو اپنے تمام دانتوں کا ہار بنا کر پیش کیا تھا، اور اپنی بغیر دانتوں والی مسکراہٹ کے ساتھ تصویر کو سوشل میڈیا پر وائرل کردیا تھا۔جب کہ ایک نوجوان کی تصویر بھی وائرل ہوئی

جس میں اس نوجوان کے منہ میں دانت نہیں ہیں جب کہ ایک اور تصویر میں دانتوں سے بنا ہار بھی دکھایا گیا۔جیو ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق تصویر میں دکھائی دینے والا شخص دراصل مصطفیٰ سلیمان ال سید ہے۔مصطفیٰ نے رواں برس اکتوبر میں یہ پوسٹ سوشل میڈیا سائٹ انسٹاگرام پر شئیر کی تھی۔ادکار نے تصویر کو لاج پر عربی زبان میں کیپشن بھی درج کیا تھا جس میں لکھا تھا کہ میں نے محبت کی خوبصورت مثال دیکھی کہ جب آپ اپنے ہی دانتوں سے ہار بنا کر اس شخص کو دیں جس سے آپ محبت کرتے ہیں۔تاہم رائٹرز نے جب ادکار سے رابطہ کیا تو انہوں نے تصدیق کی کہ وہ صرف ایک مذاق تھا اور یہ تصویر ایڈٹ کی ہوئی ہے۔دوسری جانب گجرانوالہ میں بھی ایک ایسا ہی واقعہ پیش آیا تاہم تاحال اس کی تصدیق نہیں ہو سکی۔بتایا گیا کہ جامکے چٹھہ میں جنونی عاشق نے محبوبہ کو خوش کرنے کے لئے اپنے سارے دانت توڑ کر ہار میں پرو دیئے۔گوجرانوالہ کے علاقے جامکے چٹھہ کے رہائشی مدثرنامی جنوبی عاشق نے اپنے سارے دانت توڑ کر ہار میں پرو لئے اور بطور تحفہ اپنی محبوبہ کو پیش کردیئے۔ مقامی افراد کے مطابق محبوبہ نے اپنے دوست مدثر کو زیادہ کھانے کا طعنہ دیا تھا، جس پر 16 سالہ مدثر نے کہا کہ نہ میرے دانت رہیں گے نہ ہی میں زیادہ کھانا کھا سکوں گا، اور اس نے دونوں جبڑوں سے دانت نکال کر ہار بنایا اور اسے اپنی محبوبہ کو پیش کردیا، سوشل میڈیا پر مدثر کی تصویر بھی وائرل ہوئی ہے، جسے دیکھ کر عوام اسے سخت تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں