یورپی ملک میں قرآن پاک کی بے حرمتی کے بعد ہنگامے پھوٹ پڑے

مالمو (نیوز ڈیسک)یورپی ملک سویڈن کے شہر مالمو میں دائیں بازو کے بدبخت جنونیوں کی جانب سے قرآن مجید کی توہین پر فسادات پھوٹ پڑے۔ریڈیو جرمنی کے مطابق تقریباً تین سو افراد نے احتجاج میں حصہ لیا، جس دوران کئی تنصیبات کو آگ لگا دی گئی اور مشتعل مظاہرین نے پولیس پر پتھراؤ بھی کیا۔ یہ احتجاج تارکین وطن کے پس منظر والے افراد کے ایک محلے میں پیش آنے والے اس واقعے کے بعد شروع ہوا، جس میں بد بختوں نے قرآن کو آگ لگا کر ویڈیو آن لائن شیئر کی ۔پولیس اس جسارت پر تین افراد کو حراست میں بھی لیا جا چکا ہے۔ ۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق جمعہ کے روز سویڈن

کے جنوب میں واقع شہر مالمو میں مسلمانوں کی سب سے مقدس کتاب قرآن کریم کو جلایا گیا۔سلام مخالف سرگرمی پر سیکڑوں افراد نے سڑکوں پر نکل کر شدید احتجاج کیا۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق مظاہرین پولیس پر مختلف چیزیں پھینکتے رہے جبکہ کار کے ٹائروں کو بھی آگ لگائی گئی۔خبر ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق پولیس کا کہنا ہے کہ جو کچھ بھی ہو رہا ہے یہ ہمارے کنٹرول میں نہیں ہے تاہم اسے کنٹرول کرنے کی کوشش میں مصروف ہیں۔ پولیس کے ترجمان نے بتایا کہ اس احتجاج کا تعلق جمعہ کی صبح ہونے والا واقعہ ہے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ احتجاج ٹھیک اسی جگہ ہو رہا ہے جہاں مقدس کتاب کو جلایا گیا تھا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.