کورونا کے پھیلائو میں اضافہ، تعلیمی ادارے مزید بند رکھنے کا فیصلہ کرلیا گیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا ہے کہ کورونا کی شدت میں اضافے والے اضلاع میں تعلیمی ادارے 11 اپریل تک بند رہیں گے۔وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ لاہور سمیت پنجاب کے چند اضلاع میں کورونا کا پھیلاؤ تشویشناک ہے۔انہوں نے کہا کہ سندھ، بلوچستان اور گلگت بلتستان میں کورونا کی شدت کم ہے تاہم جہاں کورونا کی شدت زیادہ ہے وہاں تعلیمی ادارے 11اپریل تک بند رہیں گے۔ لاہور، اسلام آباد، راولپنڈی، گوجرانوالہ، گجرات، ملتان، فیصل آباد،

سیالکوٹ، سرگودھا، شیخوپورہ میں اسکول بند رہیں گے۔شفقت محمود نے کہا کہ پنجاب کے دیگراضلاع میں پرانے شیڈول کے مطابق اسکول کھلیں گے۔نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کے اجلاس میں صوبائی وزرائے تعلیم و صحت ویڈیو لنک کے ذریعے شریک تھے۔این سی او سی اجلاس میں کورونا کیسز کی مثبت شرح کا جائزہ لیا گیا اور کورونا کی تیسری لہر کے پیش نظر تعلیمی ادارے بند یا کھلے رکھنے سے متعلق صورتحال پر غور کیا گیا۔ذرائع کے مطابق محکمہ صحت اسلام آباد نے تعلیمی اداروں کو مزید کچھ روز بند رکھنے کی تجویز دی تھی تاہم صوبوں کی رائے کے بعد ہی تعلیمی ادارے بند رکھنے سے متعلق حتمی فیصلہ کیا گیا۔خیال رہے اس سے قبل این سی او سی کی جانب سے ہر قسم کے تعلیمی ادارے 15 سے 28 مارچ تک بند کیے گئے تھے۔ دوسری جانب نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق کورونا وائرس سے 30 افراد جاں بحق ہوگئے، جس کے بعد اموات کی تعداد 13 ہزار 965 ہوگئی۔ پاکستان میں کورونا کے تصدیق شدہ کیسز کی تعداد 6 لاکھ 37 ہزار 42 ہوگئی۔گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 3 ہزار 301 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، پنجاب میں 2 لاکھ 2 ہزار 743، سندھ میں 2 لاکھ 63 ہزار 664، خیبر پختونخوا میں 81 ہزار 204، بلوچستان میں 19 ہزار 374، گلگت بلتستان میں 4 ہزار 975، اسلام آباد میں 53 ہزار 136 جبکہ آزاد کشمیر میں 11 ہزار 946 کیسز رپورٹ ہوئے۔

متعلقہ آرٹیکلز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button