وزیراعظم سے استعفیٰ مانگنے والی مریم نواز سے استعفیٰ طلب کرلیا گیا

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) پنجاب کے وزیر کالونیز و جیل خانہ جات فیاض الحسن چوہان نے دعویٰ کیا کہ حمزہ شہباز شریف اور مریم نواز میں شدید منہ ماری ہوئی۔ انہوں نے بتایا کہ دونوں کے مابین شدید منہ ماری بیگم شمیم اختر کے جنازے سے اگلے روز ہوئی تھی۔ انہوں نے کہا کہ بیگم صفدر اعوان وزیراعظم عمران خان سے استعفیٰ مانگ رہی ہیں لیکن حمزہ شہباز نے خود ان سے استعفیٰ مانگ لیا ہے۔فیاض چوہان کا کہنا تھا ان کے شاہینوں کے مطابق حمزہ شہباز نے بیگم صفدر اعوان کو ان کے بیانیے سے ہٹنے کے لیے خدا کے واسطے دیے۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ اس وقت شریف خاندان خود ٹوٹ

پھوٹ کا شکار ہے، یہ اپوزیشن اور ملک کو کیا متحد رکھےگا۔ پاکستان کا نوجوان 2018ء کے الیکشن میں ن لیگ کے ملک دشمن بیانئے کو پہلے ہی مسترد کر چکا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان نے تبدیلی کے نعرے کے ذریعے نوجوان نسل کو سیاسی شعور دیا جبکہ ن لیگ نے پڑھے لکھے نوجوانوں کو رکشے، ٹیکسیاں دے کر ان کے علم و ہنر کو ضائع کیا۔فیاض الحسن چوہان نے مزید کہا کہ تین عشروں میں پاکستان کو ٹھیک نہ کر سکنے والوں کو عوام ایک اور موقع نہیں دے گی۔ اُن کا کہنا تھا کہ بیگم صفدر اعوان کا 13 دسمبر کو حکومت ختم ہونے کا دعویٰ ”بلی کے خواب میں چھچھڑوں” کے مترادف ہے۔ 14 دسمبر کو بیگم صفدر کا خیالی پلاؤ پک جائے گا اور وہ خواب سےحقیقت کی دنیا میں واپس آ جائیں گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ عوام ن لیگ کے ملک دشمن بیانیے اور غیر مخلصانہ رویوں کو جان چکی ہے۔ لاہور جلسہ کے بعد پی ڈی ایم کا غیر فطری اتحاد اپنی موت آپ مر جائے گا۔ بیگم صفدر اعوان شیخ چلی کی طرح بڑھکیں مارنا بند کریں، حکومت کہیں نہیں جائے گی ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں