ملک میں گیس کی قیمت 335 فیصد تک بڑھانے کی منظوری دے دی گئی

اسلام آباد ( نیوز ڈیسک) ای سی سی نے گھریلو صارفین کے لیے گیس کی قیمتوں میں اضافے کی منظوری دے دی۔میڈیا رپورٹس کے مطابق ای سی سی کے مطابق ملک میں گیس کی قیمت 335 فیصد تک بڑھانے کی منظوری دے دی گئی ۔گھریلو صارفین کے لیے 43 سے 335 فیصد تک اضافہ کیا جائے گا۔گیس کی قیمتوں میں اضافے کی منظوری گذشتہ روز وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کی زیر صدارت ای سی سی اجلاس میں دی گئی۔قبل ازیں وزیر مملکت برائے پٹرولیم ڈاکٹر مصدق ملک نے کہا ہے کہ ماضی کی حکومت نے بروقت اور سستی گیس نہیں خریدی ،اب گیس کے نرخ بہت بڑھ چکے ہیں ،

پچاس فیصد غریبوں کے لئے گیس کی قیمتوں میں اضافہ نہیں کیا جائے گا ، اپوزیشن پنجاب میں مفت بجلی فراہمی کی سہولت پر سیاست کر رہی ہے۔جمعرات کو یہاں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ سابق حکومت نے چار ڈالر سے سولہ ڈالر تک قیمت پر گیس نہیں خریدی ،اب گیس کی قیمت چالیس ڈالر تک پہنچ چکی ہے ، انہیں معلوم تھا کہ گزشتہ سردیوں میں بھی ہمارے پاس گیس نہیں تھی ،اس کے باوجود انہوں نے طویل مدتی معاہدے نہیں کئے حالانکہ ہمارے پاس تین سے چار اضافی گارگو محفوظ رکھنے کی صلاحیت ہے۔انہوں نے کہاکہ سردیوں میں صرف گھروں میں گیس کی طلب 1170 ملین کیوبک فٹ ہے جبکہ ہمارے ملکی ذخائر میں 670ملین کیوبک فٹ گیس دستیاب ہےسابق حکومت نے گیس کی اس کمی کو پورا کرنے کے حوالے سے کوئی منصوبہ بندی نہیں کی۔ وزیر مملکت نے کہاکہ پی ٹی آئی نے اپنی حکومت جانے سے کچھ عرصہ قبل یہ قانون بنا دیا کہ گیس کی قیمت اوگرا مقرر کرے گا ، اب گیس کی قیمت میں تبدیلی کا اختیار حکومت کے پاس نہیں ہے 2سال سے گیس کی قیمت بڑھائی نہیں گئی ، ہمیں اس حوالے سے فیصلہ کرنا ہو گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں