آئی جی اور کمشنراسلام آباد کو وارننگ دیتا ہوں آئینی و قانونی راستے میں رکاوٹ مت ڈالنا،شہباز شریف

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر اور اپوزیشن لیڈر میاں محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ آئی جی اور کمشنراسلام آباد کو وارننگ دیتا ہوں آئینی و قانونی راستے میں رکاوٹ مت ڈالنا، انتظامیہ اگر عمران نیازی کی آلہ کار بنی تو قانون آپ کو اپنی گرفت میں لے گا،پی ٹی آئی کے ارکان ضمیر کی آواز پر ووٹ دیں گے، اتحادیوں نے بھی گواہی دی کہ کوئی پیسا نہیں دیا گیا۔انہوں نے چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو، سربراہ جے یوآئی ف مولانا فضل الرحمان کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سندھ ہاؤس میں کل انتہائی افسوسناک واقعہ ہوا، بلوائیوں نے تشدد کیا، دیواریں پھلانگیں، سفاکانہ ہوا،

اس کی مذمت کرتے ہیں، یہ عمران نیازی کی ایماء پر ہوا ہے۔یہ حملہ سندھ پر نہیں پاکستان کی دھرتی پر ہوا ہے۔ یہ واقعہ معمولی واقعہ نہیں ہے، کہتے ہیں ارکان اسمبلی کے ووٹ کو نہیں مانتے، ان کو 10لاکھ مجمعے میں سے گزر کرجانا ہوگا۔پاکستان کی جمہوریت جس کیلئے اپوزیشن نے بڑا دل کیا اس کے باوجود کے بدترین دھاندلی ہوئی ۔دھاندلی کی پیداوار حکومت اور وزیراعظم کو اس لیے برداشت کیا کہ جمہوریت کا پودا کہیں کھلنے سے پہلے مرجھا نہ جائے، وہ شخص جو کنٹینر پر ناخدا کی آواز میں بولتا تھا اس نے آج جمہوریت کی دھجیاں بکھیر دی ہیں۔ پاکستان کے اندر فاشزم اور خدانخواستہ ہوگی۔وہ شخص تحریک عدم اعتماد کیخلاف اپنے اقتدار کو بچانے کیلئے تمام حدیں پھلانگنے کو تیار ہے۔ کہتا ہے یہ لوگ خچر ہیں، انہوں نے پیسے لیے ہیں۔ جبکہ ان کے معتبر اتحادیوں نے منہ پر طمانچہ مارا کہ ایک دھیلا کسی کو پیسا نہیں دیا گیا۔ حکومتی ارکان سورة یٰسین پر ہاتھ رکھ کر کہہ رہے کہ انہوں نے ایک پیسا نہیں لیا، کیونکہ ہم اپنے حلقوں میں نہیں جاسکتے۔ہم اپنے حلقوں میں مہنگائی بے روزگاری کا ازالہ کرنے کیلئے ضمیر کے مطابق ووٹ دیں گے۔ چیئرمین سینیٹ کے الیکشن میں پی ٹی آئی نے ہارس ٹریڈنگ کی، بلوچستان میں ہارس ٹریڈنگ کی۔آزاد کشمیر، گلگت بلتستان میں ہارس ٹریڈنگ نہیں کی گئی؟پنجاب میں مسلم لیگ ن کے 6ممبران کو الگ کیا گیا، سلیکٹڈ وزیراعظم خود ان ممبران سے وزیراعلیٰ ہاؤس میں ملا،ساری دنیا نے دیکھا۔کیا وزیراعلیٰ ہاؤس ایک گھناؤنے جرم میں ملوث نہیں ہوا؟عمران نیاز ی کو ڈنکے کی چوٹ پر

کہتے ہیں ہم آئین وقانون کا راستہ اپنانا چاہتے ہیں، جس کو جیت کا یقین ہو، وہ کبھی لڑائی نہیں چاہتے۔اسپیکر اسمبلی عمران خان کے آلہ کار نہ بنیں، ورنہ تاریخ اور عوام معاف نہیں کریں گے۔کمشنراور آئی جی اسلام آباد کو وارننگ دیتا ہوں کہ اگر آپ نے آئینی و قانونی راستے میں رکاوٹ ڈالی اور عمران خان کے آلہ کار بنے تو قانون آپ کو اپنی گرفت میں لے گا، پھر ہم سے گلہ مت کرنا،قانون آپ کو کٹہرے میں کھڑا کرے گا۔

متعلقہ آرٹیکلز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button