سعودی عرب میں کرونا کی نئی لہر سر اٹھانے لگی

ریاض(نیوز ڈیسک)سعودی عرب میں کرونا کی نئی لہر سر اٹھانے لگی، مملکت میں کئی ماہ بعد پہلی مرتبہ 250 سے زائد یومیہ کیسز رپورٹ، شہریوں کو خبردار کر دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق کئی خلیجی ممالک میں یومیہ کرونا کیسز کی تعداد میں دوبارہ سے اضافہ ہونے لگا ہے۔ جمعرات کے روز متحدہ عرب امارات میں 1 ہزار سے زائد کرونا کیسز رپورٹ ہوئے، جبکہ سعودی عرب میں یومیہ کیسز کی تعداد کئی ماہ کی بلند ترین سطح پر پہہنچ گئی۔عرب نیوز کی رپورٹ کے مطابق جمعرات کے روز مملکت میں کل 287 نئے کرونا کیس اور 1 مریض کی موت رپورٹ ہوئی۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران

مملکت میں 113 کرونا کے مریض صحتیاب بھی ہوئے۔ بتایا گیا ہے کہ مملکت میں کئی ماہ بعد پہلی مرتبہ 250 سے زائد کرونا کیسز رپورٹ ہوئے، جس کے بعد محکمہ صحت کے حکام میں تشویش پائی جا رہی ہے۔سعودی عرب میں اب تک کل 5 لاکھ 50 ہزار سے زائد افراد میں کرونا کی تشخیص ہوئی، جبکہ اس مہلک وبا کے باعث 8 ہزار 868 افراد جان کی بازی ہارے۔کرونا کیسز میں اضافے کی اس تشویش ناک صورتحال میں سعودی محکمہ صحت کے حکام نے عوام کو خبردار کرتے ہوئے اپیل کی ہے کہ سماجی فاصلہ برقرار رکھنے سمیت ماسک کا لازمی استعمال بھی کسی صورت ترک نہ کیا جائے۔ جبکہ واضح رہے کہ کئی ممالک میں کرونا کی اومیکرون کی قسم کے پھیلاو اور سعودی عرب میں کرونا کیسز میں اضافے کے باعظ کچھ روز قبل محکمہ صحت کے حکام نے سعودی شہریوں اور رہائشیوں کیلئے ٹریول ایڈوائزری جاری کی تھی۔سعودی حکام نے سعودی شہریوں اور رہائشیوں سے اپیل کی کہ سعودی عرب سے باہر غیر ضروری سفر سے گریز کیا جائے، خاص کر ایسے ممالک جو اومیکرون کے پھیلاو کے حوالے سے خطرناک قرار دیے گئے، ان ممالک کے سفر سے ہر ممکن طور پر گریز کیا جائے۔ بیرون ممالک سے سعودی عرب آنے والے افراد کو بھی خصوصی تلقین کی گئی ہے کہ وہ مملکت آمد کے بعد کچھ روز کیلئے سماجی میل جول سے گریز کریں۔بیرون ممالک سے آنے والے سعودی شہریوں اور رہائشیوں نے بھلے ویکسی نیشن مکمل کروا رکھی ہو، پھر بھی کم از کم 5 دن کیلئے سماجی میل جول سے مکمل گریز کریں۔ اور اگر ان افراد کو طبیعت میں خرابی کی شکایت ہو تو پھر فوری کرونا پی سی آر ٹیسٹ کروائیں۔ بیرون ممالک سے سعودی عرب آنے والے افراد سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ کرونا ایس او پیز پر بھی مکمل طور پر عمل کریں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں