پنجاب میں ایئر ایمبولینس سروس شروع کرنے کا فیصلہ

لاہو(نیوز ڈیسک)صوبہ پنجاب میں ریسکیو ایئر ایمبولینس شروع کرنے کے لئے اہم اقدامات اٹھائے گئے ہیں۔وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کا کہنا ہے کہ ایئر ریسکیو سروس کے لیے ایک ارب 16کروڑ روپے مختص کیے گئے ہیں۔ریسکیو ائیرایمبولنس سے دور دراز علاقوں تک رسائی ممکن ہوگئی۔انہوں نے بتایا کہ مریضوں کو ریسکیو کی تیز ترین سہولت میسر آئے گی، سروس سے حادثات کے زخمی اور دیگر قیمتی انسانی جانیں بچائی جا سکیں گے۔ریسکیو ایمبولینس کے منصوبے کا خواب حقیقت کا روپ دھار رہا ہے۔انشاءاللہ یہ منصوبہ رواں مالی سال شروع ہو جائے گا۔اس منصوبے سے ریسکیو کیسز میں انقلاب آئے گا۔

وزیراعلی پنجاب نے مزید کہا کہ جنوبی ایشیا کی پہلی ریسکیو سروس شروع کرنے کا اعزاز حاصل ہو گا۔خیال رہے کہ 22 اگست2021 کو وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے فیصل آباد سمیت صوبے بھر میں ریسکیو ایئر ایمبولینس سروس شروع کرنے کی منظوری دیتے ہوئے کہا تھا کہ دور دراز علاقوں تک ریسکیو کا دائرہ کار وسیع ہوگا۔وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیر صدات اجلاس منعقد ہوا، اجلاس میں صوبے میں ریسکیو ایئر ایمبولینس سروس شروع کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ وزیر اعلیٰ نے ریسکیو ایئر ایمبولینس سروس سے متعلقہ امور جلد از جلد نمٹانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ ریسکیو ایئر ایمبولینس کے آغاز سے ریسکیو سروسز کو نئی شناخت ملے گی۔عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ پنجاب خطے میں ریسکیو ایئر ایمبولینس شروع کرنے والا پہلا صوبہ ہوگا، دور دراز علاقوں تک ریسکیو کا دائرہ کار وسیع ہوگا۔ایئر ایمبولینس سروس کا اجرا وقت کا تقاضہ ہے۔انہوں نے کہا کہ ہر انسانی جان قیمتی ہے اور بر وقت علاج معالجہ ہر فرد کا حق ہے، ایئر ایمبولینس کے اجرا کے لیے فوری طور پر ضروری اقدامات اٹھائے جائیں۔وزیر اعلیٰ کا مزید کہنا تھا کہ پنجاب میں ریسکیو سروسز کی بہتری کے لیے تاریخی اقدامات کیے ہیں، ریسکیو 1122 سروسز کی خدمات کو عالمی سطح پر بھی تسلیم کیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں