نہ انضمام نہ یوسف، عابد علی تیز ترین 1000 ٹیسٹ رنز مکمل کرنیوالے چوتھے پاکستانی بلے باز بن گئے

چٹاگانگ (نیوز ڈیسک) قومی ٹیم کے اوپنر عابد علی ٹیسٹ کرکٹ میں تیز ترین 1000 رنز مکمل کرنے والے چوتھے پاکستانی بلے باز بن گئے ہیں ۔ عابد علی نے چٹاگانگ ٹیسٹ کے دوران اس فارمیٹ میں اپنی 24ویں اننگز میں یہ کارنامہ سرانجام دیا ، ان کے علاوہ توفیق عمر نے بھی اتنی ہی اننگز میں 1000 ٹیسٹ رنز مکمل کیے تھے۔ ٹیسٹ کرکٹ میں تیز ترین 1000 رنز مکمل کرنے کا ریکارڈ مایہ ناز اوپنر سعید انور کے پاس ہے جنہوں نے 20 اننگز میں یہ اعزاز حاصل کیا تھا، صادق محمد 22 اور سابق کپتان جاوید میانداد 23 اننگز میں یہ اعزاز حاصل کرکے دوسری اور تیسری پوزیشن پر براجمان ہیں ۔

یاد رہے کہ پاکستان اور بنگلا دیش کے درمیان دو ٹیسٹ میچوں کی سیریز کے پہلے میچ کے دوسرے روز بنگلا دیش کے 330 رنز کے جواب میں پاکستان نے کھیل کے اختتام پر بغیر وکٹ کھوئے 145 رنز بنالیے ہیں ۔چٹاگانگ کے چوہدری ظہور الٰہی سٹیڈیم میں جاری میچ میں عابد علی اور عبداللہ شفیق وکٹ پر موجود ہیں۔ قبل ازیں بنگلا دیش نے اپنی پہلی نامکمل اننگز کا آغاز کیا تو لٹن داس 113 اور مشفیق الرحیم 82 رنز پر بیٹنگ کر رہے تھے تاہم کھیل کے دوسرے ہی اوور میں حسن علی نے گزشتہ روز سنچری سکور کرنے والے لٹن داس کو ایک رن کے اضافے کے بعد 114 رنز پر ایل بی ڈبلیو کر دیا۔لٹن داس اور مشفیق الرحیم کے درمیان 206 رنز کی شراکت ہوئی۔ یاسر علی کو بھی حسن علی نے 4 رنز پر بولڈ کر دیا جبکہ مشفیق الرحیم 91 رنز بنا کر فہیم اشرف کی گیند پر وکٹوں کے پیچھے کیچ آؤٹ ہو گئے، بنگلا دیش کی پوری ٹیم 330 پر آؤٹ ہو گئی۔ پاکستان کی جانب سے حسن علی نے شاندار بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 5 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جبکہ شاہین شاہ آفریدی اور فہیم اشرف نے دو دو وکٹیں حاصل کی، ایک وکٹ ساجد خان کے حصے میں آئی۔ کھیل کے پہلے روز بنگلا دیش نے لٹن داس اور مشفیق الرحیم کی ذمے دارانہ بیٹنگ کے باعث 4 وکٹوں کے نقصان پر 253 رنز سکور کیے تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں