سعودی عرب میں دو پاکستانی گروپوں کی سرعام خوفناک لڑائی، ویڈیو وائرل

جدہ(نیوز ڈیسک)سعودی عرب میں روزگار کی غرض سے 25 لاکھ سے زائد پاکستانی مقیم ہیں جو باعزت طریقے سے اپنا روزگار کما کر ایک طرف اپنے گھر والوں کی کفالت کر رہے ہیں اور دوسری جانب پاکستان کی معیشت کے لیے بھی بہت بڑا سہارا ثابت ہو رہے ہیں۔ سعودی مملکت میں زیادہ تر پاکستانی امن پسند اور قانون کا احترام کرنے والے ہیں۔تاہم کچھ ایسے پاکستانی بھی ہیں جن کی بُری حرکتوں کی وجہ سے سعودی عرب میں پاکستان اور پاکستانی کی بدنامی ہوتی ہے۔ ایسا ہی ایک واقعہ جدہ کے علاقے بابِ شریف میں بھی پیش آیا ہے جہاں ایک درجن سے زائد پاکستانی کسی بات پر آپس میں گتھم گتھا ہو گئے۔

ایک بازارکی پارکنگ کے باہر ہونے والے اس واقعے کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی ہے۔سعودی اخبار المرصد کے مطابق پاکستانیوں کے دو گروپ میں کئی منٹ تک شدید لڑائی ہوئی جس دوران دونوں جانب سے ڈنڈے سوٹوں، لاتوں اور گھونسوں کا آزادانہ استعمال کیا گیا۔ اس جھگڑے کے دوران کئی پاکستانی لہو لہان ہو گئے۔ سڑک پر سے گزرنے والے کئی راہگیروں اور کار سواروں نے ان کی لڑائی چھُڑوانے کی کوشش کی مگر ان مشتعل پاکستانیوں کے خطرناک تیور دیکھ کر وہ بھی کچھ نہ کر سکے اورپھر وہیں چپ چاپ کھڑے تماشا دیکھتے رہے۔قریب ہی موجود کسی شخص نے اس پُرتشدد واقعے کی ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پرپوسٹ کر دی ہے۔جدہ میں پاکستانیوں کی اس خونخوار لڑائی پرسوشل میڈیا پر لوگوں کی جانب سے سخت ردِعمل ظاہر کیا گیا ہے۔ سعودیہ میں مقیم پاکستانیوں کا کہنا ہے کہ ان پاکستانیوں کی دُنیا بھر میں اپنے وطن کی جگ ہنسائی کرا دی ہے۔ ان کی وحشیانہ انداز کی لڑائی اور جنونی حملوں کے دوران ایک دوسرے کا خون بہانے سے سعودی عوام اور دیگر غیر ملکیوں کا ہمارے بارے میں کتنا غلط تاثر بنے گا۔سوشل میڈیا صارفین نے مطالبہ کیا کہ اس جھگڑے میں ملوث تمام پاکستانیوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے تاکہ آئندہ اس طرح یوں سرعام سعودی سڑکوں کا جنگ کا میدان بنانے کی کوئی بھی ہمت نہ کرے۔ واضح رہے کہ چند روز قبل ایک پاکستانی ٹیکسی ڈرائیور کو خواتین مسافروں کی خفیہ کیمرے سے تصاویر بنانے پر گرفتار کیا گیا تھا۔ یہ بزرگ ٹیکسی ڈرائیور تصاویر لے کر انہیں سوشل میڈیا پر شیئر کر رہا تھا۔ صارفین کی شکایت پر یہ شرمناک حرکات کرنے والے پاکستانی ڈرائیور کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.