پاکستانی کرکٹرز مذہب کے قریب اور نماز کے پابند ہیں ،میتھو ہیڈن

لاہور (نیوزڈیسک) قومی کرکٹ ٹیم کے بیٹنگ کنسلٹنٹ میتھیو ہیڈن نے کہا ہے کہ پاکستان ٹیم میں جو کلچر دیکھا وہ آسٹریلین ڈریسنگ روم میں نہیں دیکھا، پاکستانی کرکٹرز مذہب سے بہت قریب ہیں، نماز کے پابند ہیں، یہ بات مجھے بہت اچھی لگی۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستانی کرکٹرز ڈریسنگ روم سے باہر جتنے بڑے سٹار ہیں، اندر اتنے ہی منکسر المزاج ہیں اور انہیں سپورٹس کا بہت احترام ہے۔ایک انٹرویو کے دوران 49 سالہ میتھیو ہیڈن نے کہا کہ مختصر مدت میں پلیئرز کی

تکنیک کی بجائے مائینڈ سیٹ پر کام کررہا ہوں جب کہ بابر اعظم ایک مضبوط اعصاب والے کپتان ہیں، وہ جلد بازی میں کوئی فیصلے نہیں کرتے۔انہوں نے کہا کہ پاکستانی ٹیم میں مختلف عمر کے پلیئرز ہیں، کچھ تو ہمارے ساتھ بھی کھیلے ہوئے ہیں، محمد حفیظ اور شعیب ملک بطور سینئر اپنا کردار اچھا نبھا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ زبان کا مسئلہ تو ہے مگر کرکٹ سکھانے کے لیے زبان کا سمجھ آنا کچھ زیادہ اہم نہیں ،کرکٹ یا سپورٹس کو آپ اشاروں میں بھی سمجھا سکتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں