پاکستان کو جنات کی رہنمائی اور جادو ٹونے سے چلایا جارہا ہے، فضل الرحمٰن

پشاور (این این آئی)سربراہ جمعیت علماء اسلام (جے یو آئی ف) مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ ہمارے حکمران جنات کی طرف چلے گئے ہیں، جادو ٹونے سے ملک چلا رہے ہیں،عالمی قوتوں کی کوشش ہے کہ پاکستان سے اسلامی آئین کو ختم کیا جائے،خواتین اور بچوں کے حقوق ہم سے زیادہ کوئی نہیں جانتا ہے،یہ ہمیں حقوق پڑھاتے ہیں،ملک کوسیکولر بنانے کا خواب کبھی پورا نہیں ہوگا۔پشاور میں کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ یہ ملک جنات سے رہنمائی حاصل کرنے کے لیے نہیں بنا تھا، جنات کو ہم سے رہنمائی حاصل کرنا ہے۔مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ حکومت

نے ملک کی معیشت کو تباہ کردیا، ترقی کا تخمینہ زیرو سے بھی نیچے آگیا۔سربراہ جے یو آئی نے کہا کہ نوجوانوں کو ایک کروڑ نوکریاں دینے کا کہا گیا، 30 لاکھ افراد کو تین سال میں بے روزگار کردیا۔انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کی بے روزگاری اور کسمپرسی کا غلط فائدہ اٹھا کر ان کو دھوکا دیا گیا، آپ نے قوم کو دھوکا دیا چین ناراض ہے، اسے بھی دھوکا دیا۔ انہونے انہوں نے کہا کہ ملک کوسیکولر بنانے کا خواب کبھی پورا نہیں ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ آج بھارت نے کشمیر ہم سے چھین لیا تو ہم کہاں کھڑے ہیں؟ ان کا کہنا تھا کہ فاٹا کے انضمام کو بھارت نے دلیل بنا کر کشمیر ہم سے چھین لیا۔مولانا فضل الرحمان نے کڑی نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ ان کوپتہ ہی نہیں ہے کہ اقوام متحدہ میں کشمیر پرپاکستان کا مؤقف کیا ہے؟ انہوں نے کہا کہ آج پاکستان کی معیشت زمین بوس ہو چکی ہے اور مہنگائی و بیروزگاری میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ نوکریوں کو جھانسہ دے کر نوجوانوں کے ساتھ دھوکہ کیا گیا ہے۔پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ آج غریب آدمی بازار سے بچوں کے لیے راشن لینے کے قابل نہیں رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ 74سالوں میں ملازمین کی تعداد ایک کروڑتک نہیں پہنچی لیکن یہ ایک کروڑنوکریوں کا جھانسہ دے رہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں