چیئرمین سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ اپنے عہدے سے مستعفی، وجہ کیا بنی ؟ جانئے تفصیلات

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)چیئرمین سی پیک اتھارٹی اپنے عہدے سے مستعفی۔ تفصیلات کے مطابق چئیرمین سی پیک اتھارٹی عاصم سلیم باجوہ نے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان کیا ہے۔ عاصم سلیم باجوہ کی جانب سے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری پیغام میں مستعفی ہونے کا اعلان کیا گیا۔اپنے پیغام میں عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ میں اللہ تعالیٰ کا شکر گزار ہوں جس نے مجھے پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) اتھارٹی کے اہم ادارے کو مستقبل کے سمت کا تعین کرتے ہوئے تمام سی پیک منصوبوں کے لیے ونڈو کے طور پر اٹھانے اور چلانے کا موقع دیا۔یہ سب کچھ

وزیراعظم عمران خان اور ان کی حکومت کے مکمل اعتماد اور حمایت کے بغیر ممکن نہیں تھا۔سی پیک کی ترقی کا یہ سفر جاری رہے گا، میری نیک خواہشات خالد منصور کیلئے ہیں جو اسے آگے لے جانے کے لیے پوری طرح تیار ہیں۔ سی پیک پاکستان کے لیے لائف لائن ہے، یہ انشاء اللہ ہمیں ترقی یافتہ اور مکمل طور پر ترقی یافتہ ملک میں بدل دے گا۔ عاصم سلیم باجوہ کے مستعفی ہونے کے اعلان پر ردعمل دیتے ہوئے وفاقی وزیر اسد عمر کی جانب سے کہا گیا کہ سی پیک کو آگے بڑھانے اور پاک چین اقتصادی راہداری کے دوسرے مرحلے میں منتقلی کے ساتھ اہم منصوبے کے دائرہ کار کو وسیع کرنے میں کردار ادا کرنے پر لیفٹیننٹ جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ کا شکر گزار ہوں۔ان کی لگن اور عزم بڑی طاقت اور حمایت کا ذریعہ تھی۔ جبکہ دوسری جانب وزیراعظم عمران خان نے خالد منصور کو معاون خصوصی برائے سی پیک امور تعینات کرنے کی منظوری دی ہے۔اس بات کا اعلان معاون خصوصی شہباز گل کی جانب سے کی گئی ٹوئٹ میں کیا گیا۔ معاون خصوصی نے اپنی ٹوئٹ میں کہا کہ خالد منصور خوش آمدید اور اللہ آپ کا حامی و ناصر ہو۔

اپنا تبصرہ بھیجیں