اپوزیشن اتحاد ہم نے بنایا ہم کیوں چھوڑیں ، پیپلز پارٹی کے سی ای سی اجلاس میں فیصلہ

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)پیپلز پارٹی کے سی ای سی اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ استعفے دیں گے اور نہ ہی پی ڈی ایم چھوڑیں گے۔ تفصیلات کے مطابق بلاول بھٹو زرداری کی زیرصدارت سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی نے فیصلہ کیاہے کہ اسمبلیوں سے استعفے دیں گے نہ پی ڈی ایم چھوڑیں گے۔پی ڈی ایم ہم نے بنائی ہم کیوں چھوڑیں ،ارکان نے رائے دیتے ہوئے کہاکہ پی ڈی ایم کو فوری طور پر نہ چھوڑا جائے،جو پی ڈی ایم توڑنا چاہتے ہیں انہیں بے نقاب کیا جائے۔ذرائع کے مطابق سابق صدر آصف زرداری اور چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو کی سربراہی میں سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی(سی ای سی)کااجلاس ہوا،

بلاول ہاوس میں ہونے والے سی ای سی اجلاس میں پی پی پی شعبہ خواتین کی مرکزی صدر فریال تالپورنے بھی شرکت کی،آصف زرداری بذریعہ ویڈیو لنک سی ای سی اجلاس میں شریک ہوئے۔اجلاس میں پی ڈی ایم کی جانب سے استعفوں کی تجویز پر تبادلہ خیال کیا گیا، اس کے علاوہ مستقبل میں اپوزیشن کی حکمت عملی پر بھی غورکیاگیا۔اجلاس میں پی ٹی آئی اورآئی ایم ایف ڈیل کے معیشت پراثرات اورسٹیٹ بینک آرڈیننس پر بھی بات چیت ہوئی،سی ای سی اجلاس میں کشمیر پر پی ٹی آئی کی کنفیوڑ پالیسی پر تبادلہ خیال کیاگیا۔وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ نے سی ای سی کے شرکا کو کل ہونے والی مشترکہ مفادات کونسل کے اجلاس کے حوالے سے بریفنگ دی،پیپلزپارٹی کی سی ای سی کے شرکا کی دی گئی پالیسی کے تحت مراد علی شاہ کل مشترکہ مفادات کونسل میں عوام کا مقدمہ لڑیں گے۔ذرائع کے مطابق بلاول ہاوس میں پی پی سی ای سی اجلاس میں پی ڈی ایم کاشوکاز نوٹس زیربحث آیا،بلاول نے اجلاس کے شرکا کو شاہد خاقان کاشوکاز نوٹس پڑھ کر سنایا،بلاول بھٹو نے شاہد خاقان عباسی کے شوکاز نوٹس کو پھاڑ کر پھینک دیا،بلاول کی جانب سے نوٹس پھاڑنے پر شرکا نے تالیاں بجائیں۔چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہاکہ عزت کیلئے سیاست کرتے ہیں، عزت سے بڑھ کر کچھ نہیں ،بلاول بھٹو نے کہاکہ پی ڈی ایم میں ہم برابری کی بنیاد پر شامل ہوئے تھے لیکن یہ کوئی طریقہ نہیں کہ ہمیں ڈکٹیٹ کیا جائے یا کوئی نوٹس دے دیا جائے، پی ڈی ایم میں ہم کسی کو جواب دہ نہیں ہے۔

متعلقہ آرٹیکلز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button